-

6 January 2015

tamana ki achopti dallion say


تمنّا کی اچھوتی ڈالیوں سے
کسی وارفتگی کی تُند بیلیں
عجب انداز میں لپٹی ہوئی ہیں...
کہ ساری ڈالیاں سہمی ہوئی ہیں..
شگوفے مہر و اُلفت کے چمن میں!
خمارِ عشق میں ڈوبے ہوئے ہیں..

ملن کی تتلیاں بھی رنگ بکھیرنے کی خواہاں ہیں..
مگر دل مضطرب سا ہے..
یقیں پاؤں پسارے جھولتا ہے..
بے یقینی کے کُمند انداز جھولے میں..
اُڑانیں جب بھی بھرتا ہے..
یہی سرگوشی کرتا ہے..
جُدا ہونے کا موسم آگیا ہے..

♥♥♥♥♥

Newer post

Followers

♥"Flag Counter"♥

Flag Counter

facebook like slide right side

like our page

pic headar