-

12 May 2015

ab tumhen sochna nhin hi mujay



اب تمہیں سوچنا نہیں ہے مجھے 
اب مرے سامنے نئی دنیا 
اب مرے سامنے نئے منظر 
اب مرے ساتھ ہیں نئے ساتھی
اب مرے پاس ہیں نئ سوچیں
اب مری آنکھ میں نئے سپنے
اب تمہیں سوچنا نہیں ہے مجھے
میں نئے راستوں کا راہی ہوں
ان نئے راستوں میں ماضی کا
کوئی منظر کہیں جو آئے گا
اپنی آنکھوں کو بند کر لوں گا
اپنے کانوں پہ ہاتھ رکھ لوں گا
کہ نئے راستوں پہ ماضی کا
ہاتھ تھامو تو پاؤں رُکتے ہیں
مجھ کو رُکنا نہیں ہے رستے میں
نئی منزل پُلا رہی ہے مجھے
اب تمھیں سوچنا نہیں ہے مجھے
♥♥♥♥♥

Newer post

Followers

♥"Flag Counter"♥

Flag Counter

facebook like slide right side

like our page

pic headar